سنگاپور کی تاریخ کا سب سے بڑا سائبر حملہ

سنگا پور : سنگاپورکی تاریخ میں سب سے بڑا سائبر حملے میں ہیکرز نے وزیراعظم سمیت پندرہ لاکھ افراد کا ڈیٹا چرالیا، وزیر صحت نے  ڈیٹا لیک ہونے پرمتاثرہ افراد سے معافی مانگی ہے۔

غیرملکی خبرایجنسی کے مطابق سنگاپور میں ہیکرز نے سرکاری ہیلتھ ڈیٹا بیس میں گھس کر پندرہ لاکھ مریضوں کی ذاتی معلومات حاصل کرلیں، جو معلومات ہیک کی گئیں ان میں وزیراعظم لی کی دواؤں کا نسخہ اور دیگرذاتی معلومات بھی شامل ہیں۔

اعلیٰ حکام کے مطابق سائبرحملہ گزشتہ روز کیا گیا تھا، یہ جاننے کی کوشش کی جارہی ہے کہ مریضوں کی معلومات چرانے کے پیچھے کیا مقاصد ہوسکتے ہیں۔

حکام نے ملکی تاریخ میں اب تک کا سب سے سنگین سائبر حملہ قرار دیتے ہوئے کہا کہ حملہ انتہائی مہارت سے کیا گیا تاہم سائبر حملوں کے ذمہ دارافراد سے متعلق کچھ نہیں بتایا گیا۔

سائبر سیکیورٹی ایجنسی سنگاپور نے حملے کی تصدیق کرتے ہوئے کہا کہ یہ کسی ایک ہیکر یا مجرمانہ گروہ کا کام نہیں ۔

وزیراعظم لی نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ فیس پر ایک پوسٹ میں کہا کہا کہ ہیکرز کی جانب سے مجھے ہی  نشانہ بنایا گیا ہے، شاید وہ کچھ  خفیہ معلومات حاصل کرنا چاہتے یا مجھے شرمندہ کرنے کے لئے کیا،  اگر ایسا ہیں تو وہ مایوس ہو جائیں گے۔

سنگاپورکے وزیرصحت نے سائبرحملے میں ڈیٹا لیک ہونے پرمتاثرہ افراد سے معافی مانگی ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

گذشتہ شمارے