عائشہ تارڑ اسکواش ٹورنامنٹ میں امریکی نمائندگی کرنے والی کم عمر پاکستانی

واشنگٹن : امریکی طالبہ عائشہ تارڑ رواں ہفتے اسکواش کے عالمی ٹورنامنٹ میں امریکا کی نمائندگی کریں گی، وہ یہ اعزاز حاصل کرنے والی پہلی پاکستانی لڑکی ہیں۔

تفصیلات کے مطابق امریکی شہر بالٹی مور کی رہائشی پاکستانی نژاد عائشہ تارڑ کم عمری میں ہی دنیا بھر اپنی کامیابی کے جھنڈے گاڑتے ہوئے اسکواش کے میدان میں درجن سے زائد ایوارڈز اپنے نام کرچکی ہیں۔

پاکستانی نژاد امریکی طالبہ نے محض 11 برس کی عمر میں امریکا میں پہلی پوزیشن حاصل کرنے کے بعد انڈر 13 میں امریکا کی نمائندگی کرتے ہوئے 5 اگست کو کینیڈا کے خلاف ’بیٹر آف دی بارڈر ٹورنامنٹ‘ کھیلیں گی۔

عائشہ تارڑ کم عمری میں اسکواش ٹورنامنٹ میں امریکا کی نمائندگی کرنے کا اعزاز حاصل کرنے والی پہلی پاکستانی ہیں، عائشہ تارڑ نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ ’میں اسکواش کے حوالے سے بہت پرجوش ہوں‘۔

پاکستانی نژاد طالبہ کا کہنا تھا کہ ’پاکستان اسکواش کے حوالے سے بہت مشہور ہے، اسکواش کی پاکستانی کھلاڑی جنگیز خان نے مجھے بہت متاثر کیا ہے اور میں نے ان کے اسکوئش کی تمام ویڈیوز دیکھیں ہیں‘۔

عائشہ تارڑ نے بتایا کہ ’میں جب 7 برس کی تھی تو میری والدہ نے مجھے اسکواش کے بارے میں بتایا اور کھیلنا سکھایا تھا، اس کے بعد میں مسلسل اسکواش کھیل رہی ہوں‘۔

ان کا مزید کہنا تھا کہ میرے والدین نے مجھے قومی اور عالمی سطح پر لانے کے لیے بہت قربانیاں دی ہیں، میری جتنی بھی کامیابیاں ہیں وہ سب میرے والدین کی وجہ سے ہیں‘۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

گذشتہ شمارے