کینیا میں پاکستانی چاول کی شپمنٹس چوری، حکومت مدد کرے، رائس ایکسپورٹرز

کراچی: رائس ایکسپورٹرز نے کہا ہے کہ کینیا کو پاکستانی چاول کی بر آمدات کے دوران چاول کی شپمنٹ کینیا کے پورٹس سے ہمارے خریدار کے گودام پہنچنے کے دوران راستے میں ہی چوری ہوجاتی ہیں، کینیا کی حکومت کوئی تعاون نہیں کررہی،مسئلہ حکومتی سطح پر حل کیا جائے۔

رائس ایکسپورٹرز ایسوسی ایشن کے قائم مقام چیئرمین رفیق سلیمان نے نمائندہ اے آر وائی نیوز کو بتا یا کہ پاکستان نے کینیا کو گزشتہ مالی سال جولائی میں 17 کروڑ ڈالر مالیت کا 4 لاکھ 65 ہزار میٹرک ٹن چاول بر آمد کیا جبکہ اس سے پہلے 19 کروڑ ڈالر مالیت کے تقریباً 5 لاکھ ٹن چاول بر آمد کرچکے ہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ اسلام آباد میں تعینات کینیا کے ہائی کمشنر پروفیسر جولیس کیبٹ سے ملاقات میں پاکستانی رائس ایکسپورٹرز نے مختلف مشکلات سے آگاہ کیا، کینیا میں پاکستانی چاول کی چوری کی شکایات ملتی ہیں اور اس معاملے میں ہمیں کینیا کی حکومت سے کوئی تعاون فراہم نہیں کیا جاتا۔

 
Share on FacebookEmail this to someonePrint this page

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

گذشتہ شمارے