پاکستان کا نام’گرے لسٹ‘ میں شامل نہیں کیاگیا، ترجمان ایف اے ٹی ایف

اسلام آباد: فنانشل ایکشن ٹاسک فورس (ایف اے ٹی ایف) کی ترجمان نے کہا ہے کہ پاکستان کو ’گرے لسٹ‘ میں شامل نہیں کیا گیا ہے۔

ترجمان الیگزینڈر ڈانیالے نے کہا ہے کہ ایف اے ٹی ایف کا اعلامیہ جاری کر دیا گیا جس کے مطابق پاکستان کا نام ’گرے لسٹ‘ میں شامل نہیں کیا گیا ہے۔

انہوں نے کہا کہ ایف اے ٹی ایف پاکستان کا نام گرے فہرست میں شامل کرنے کی خبروں کی ذمہ دار نہیں ہے۔

 ترجمان کے مطابق پاکستان کو تادیبی اقدامات کرنے کے لیے 3 ماہ کا وقت دیا گیا ہے  اور اس دوران پاکستان نے یہ اقدامات نہ اٹھائے تو اس کے لیے مشکلات ہوسکتی ہیں۔

قبل ازیں نمائندہ جیونیوز کے مطابق ترجمان ایف اے ٹی ایف کا کہنا تھا کہ فی الحال پاکستان سے متعلق سب  قیاس آرائیاں ہیں اور بھارتی سفارت کار کچھ چیزیں لیک کررہے ہیں۔

واضح رہے کہ پیرس میں فنانشل ایکشن ٹاسک فورس کے اجلاس کا آج (23 فروری) آخری دن تھا جس میں پاکستان کا نام ’گرے لسٹ‘ میں ڈالے جانے کے حوالے سے اہم فیصلہ کیا جانا تھا۔

پاکستان کوابھی تک ایف اے ٹی ایف رپورٹ کا انتظار ہے: دفتر خارجہ

دوسری جانب ترجمان دفتر خارجہ کا کہنا ہے کہ رواں برس 20 جنوری کو امریکا اور برطانیہ نے ایف اے ٹی ایف کو پاکستان کو گرے ممالک کی فہرست میں شامل کرنے کی درخواست کی تھی۔

ترجمان کے مطابق ‘ایف اے ٹی ایف میں پیش کردہ تحفظات امریکی ہیں اور پاکستان نے ان میں سے بیشتر تحفظات کے حوالے سے پہلے ہی اقدامات کیے ہیں اور اس سلسلے میں ایک ایکشن پلان پر باقاعدہ عملدرآمد شروع کر رکھا ہے’۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

گذشتہ شمارے